شاہ سلمان کا ترک صدر کو فون، تعلقات کے فروغ پر تبادلہ خیال

34


ریاض (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 21 نومبر 2020ء) : سعودی فرماں رواں شاہ سلمان نے ترکی کے صدر طیب ادرگان سے ٹیلیفونک رابطہ کیا ہے۔تفصیلات کے مطابق شاہ سلمان اور ترک صدر طیب اردگان کے مابین ٹیلیفونک گفتگو ہوئی ہے۔شاہ سلمان اور ترک صدر نے جی 20 کانفرنس سے متعلق تبادلہ خیال کیا ہے۔شاہ سلمان اور طیب اردگان نے تعلقات کے فروغ اور استحکام پر بات کی۔ترکی اور سعودی عرب نے مسائل کے حل کے لیے مذاکرات پر اتفاق کیا ہے۔
واضح رہے کہ سعودی عرب اور ترکی کے تعلقات میں دراڑیں تھیں۔ سعودی عرب کی جانب سے مقامی تاجروں پر ترکی سے تجارت نہ کرنے کے لیے دباؤ ڈالے جانے کی خبریں بھی سامنے آ رہی ہیں۔ سرحد پر ترکی سے آئے تازہ فروٹ اور سبزی کے ٹرک بھی روک لیے گئے تھے۔ مڈل ایسٹ آئی کے مطابق سعودی عرب اور ترکی کے درمیان تناؤ میں شدت آگئی ۔

()

جس کے اثرات دونوں ممالک کی تجارت اور کاروباری طبقات پر بھی پڑنا شروع ہوگئے ۔ سعودی عرب نے اپنے مقامی تاجرو ں پر دباؤ ڈالنا شروع کیا تھا کہ وہ ترکی کی کمپنیوں کے ساتھ کسی طرح کی بھی تجارت نہ کریں، اور ترکی بنائی ہوئی اشیاء کی خریداری سے باز رہیں۔گذشتہ سال ترکی میں سعودی سفارت خانے نے اپنے شہریوں کو خبردار کیا تھا کہ ملک کے بعض علاقوں میں ان کے پاسپورٹس اور مالی رقوم کو چوری اور لوٹ مار کا نشانہ بنایا جا سکتا ہے۔ سفارت خانے کی جانب سے جاری بیان میں واضح کیا گیا تھا کہ بعض سعودی مرد اور خواتین شہریوں کو ترکی کے بعض علاقوں میں نا معلوم افراد کی جانب سے مذکورہ کارروائیوں کا نشانہ بنایا گیا ۔بیان میں سعودی شہریوں کو باور کرایا گیا کہ وہ بِھیڑ اور رًش کے مقامات سے دور رہیں اور ہنگامی صورت حال میں انقرہ میں سعودی سفارت خانے یا استنبول میں قونصل خانے سے رابطے میں ہر گز نہ ہچکچائیں۔تاہم آج شاہ سلمان اور طیب اردگان کے مابین رابطہ ہوا ہے جس کے بعد دونوں ممالک کے تعلقات میں مزید بہتری آنے کی امید ظاہر کی جا رہی ہے۔



Source link

Credits Urdu Points